Chand Qadmo Se Sakina Ne Ye Manzar
چند قدموں سے سکینہ نے یہ منظر دیکھا
شمر کا بابا پہ چلتا ہوا خنجر دیکھا۔
 
خاک پر گرتی رہی بچی دہکتے رن میں
باپ کی زلفوں میں جب دستِ ستمگر دیکھا-
 
ظلم تو یہ تھا قتل کرنے سے پهلے اس نے
مار کر بیٹی کو شبیر کو ہنس کر دیکھا-
 
روک لے ہاتھ کو شاید وہ نہ پھر وار کرے
شہہ کی گردن پہ گلا بیٹی نے رکھ کر دیکھا۔
 
پہلی ضربت سے جو آیا تھا شاہ کی شہہ رگ پر
زخم وہ پہلا سکینہ کے جگر پر دیکھا۔
3,966 Views
Chand Qadmo Se Sakina Ne Ye Manzar

Scan this QR code to view these lyrics on your mobile devices.

More
Lyrics

More Nohay Lyrics Available On The APP

Screenshot