Muslim Ki Karbala Lyrics | Mesum Abbas
Haye MUSLIM E GHAREEB AS
Haye MUSLIM E GHAREEB AS
 
Logo’n Ye Shehar E Kufa, MUSLIM AS Ki Karbala Hai
Ek Be Watan Yahan Bhi Faujo’n Mein Ghir Gaya Hai
 
Logo’n Ye Shehar E Kufa, MUSLIM AS Ki Karbala Hai
 
1) Ashoor Se Bhi Pehle Ashoor Ka Hai Manzar
Khush Ho Rahe Hain Zalim MUSLIM AS Ka Khoon Baha Kar
Talwar Hai Laee’n Ki, Mazloom Ka Gala Hai
 
2) Barse Hain Teer Is Par Mare Gaye Hain Neze
Laakho’n Se Phir Bhi MUSLIM AS Larta Raha Akele
Na Bhai Hai Na Bete, Na Koi Aasra Hai
 
Haye..Haye..Haye..
 
3) Phenka Gaya Hai Jis Dam Inko Bulandiyo’n Se
Awaaz Tootne Ki Aai Thi Pasliyo’n Se
Mazloom Ke Labo’n Par, Bas Haaye SYEDA SA Hai
 
4) Hota Gaya Izafa Bekas Ki Bekasi Mein
Khencha Gaya Hai Laasha Koofe Ki Har Gali Mein
SHABBIR AS Ki Tarha Se, Sar Jism Se Juda Hai
 
5) Kufe Mein Dar Ba Dar The MUSLIM AS Ke SHAHZADE
Apne Padar Ko Aakhir Kaise Kafan Wo Dete
SAJJAD AS Par Jo Aya, Waisa Hi Marhala Hai
 
6) Qasid SHAH E HUDA AS Ka Pyasa Tha Be Watan Tha
Chalees Din Huye The Laasha Bhi Be Kafan Tha
Jo SHEH AS Ke Saath Hoga, Sab Kuch Wahi Hua Hai
 
7) AZLAN aur MESUM Tha SYEDA SA Ka Nauha
Haye Mere Laal Tujh Ko Mara Gaya Hai Pyasa
MUSLIM AS Ki Laash Par Bhi, ZEHRA SA Ki Ye Buka Hai..
 
Logo’n Ye Shehar E Kufa, MUSLIM AS Ki Karbala Hai
 
Urdu Lyrics:
 
ہائے مُسلمِ غریب ع
ہائے مُسلمِ غریب ع
 
لوگوں یہ شہرِ کوفہ، مُسلم ع کی کربلا ہے
ایک بے وطن یہاں بھی، فوجوں میں گھر گیا ہے
 
لوگوں یہ شہرِ کوفہ، مُسلم ع کی کربلا ہے
 
۱) عاشور سے بھی پہلے عاشور کا ہے منظر
خوش ہو رہے ہیں ظالم مُسلم ع کا خوں بہا کر
تلوار ہے لعیں کی، مظلوم کا گلا ہے
 
۲) برسے ہیں تیر اس پر مارے گئے ہیں نیزے
لاکھوں سے پھر بھی مُسلم ع لڑتا رہا اکیلے
نہ بھائی ہے نہ بیٹے، نہ کوئی آسرا ہے
 
ہاے ۔ہاے۔ ہاے-
 
۳) پھینکا گیا ہے جس دم ان کو بلندیوں سے
آواز ٹوٹنے کی آئی تھی پسلیوں سے
مظلوم کے لبوں پر، بس ہائے سیدہ س ہے
 
۴) ہوتا گیا اضافہ بے کس کی بے کسی میں
کھینچا گیا ہے لاشہ کوفے کی ہر گلی میں
شبیر ع کی طرح سے، سر جسم سے جدا ہے
 
۵) کوفے میں در بدر تھے مُسلم ع کے شاہزادے
اپنے پدر کو آخر کیسے کفن وہ دیتے
سجاد ع پر جو آیا، ویسا ہی مرحلہ ہے
 
۶) قاصد شہ ہدیٰ ع کا پیاسا تھا بے وطن تھا
چالیس دن ہوئے تھے لاشہ بھی بے کفن تھا
جو شہ ع کے ساتھ ہوگا، سب کچھ وہی ہوا ہے
 
۷) ازلانؔ اور میثم تھا سیدہ س کا نوحہ
ہاے میرے لال تجھ کو مارا گیا ہے پیاسا
مُسلم ع کی لاش پر بھی، زہرا س کی یہ بکا ہے
لوگوں یہ شہرِ کوفہ، مُسلم ع کی کربلا ہے
 

 

222 Views
Muslim Ki Karbala Lyrics | Mesum Abbas

Scan this QR code to view these lyrics on your mobile devices.

More
Lyrics

More Nohay Lyrics Available On The APP

Screenshot